افواج پاکستان کے بوٹوں کی خاک کواپنی آنکھوں کا سرمہ سمجھتا ہوں: مخدوم جاوید ہاشمی

افواج پاکستان کے بوٹوں کی خاک کواپنی آنکھوں کا سرمہ سمجھتا ہوں: مخدوم جاوید ہاشمی
ملتان (نمائندہ سرائیکستان) مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما سینئر سیاستدان مخدوم جاوید ہاشمی نے کہا ہے کہ شہید ذوالفقار علی بھٹو سے کڑا وقت کسی پر نہیں آیا میری جنگ پاکستان کے اداروں کو مضبوط کرنے کی جنگ ہے آئی ائس آئی پاکستان کی بقا کی جنگ لڑ رہی ہے اس کا مقابلہ امریکی سی آئی اے بھی نہیں کر سکتا عمران خان میرے اوپر الزام لگارہے ہیں کہ اصغر خان کیس میں میں نے پیسے لئے ہیں عمران خان یوٹرن لے رہے ہیں وہ جھوٹ بول رہے ہیں تو اس پر قائم بھی رہیں سوشل میڈیا پر میرے خلاف پروپیگنڈہ کیا گیا کہ مجھے مارا گیا پریس کلب کی پرانی تصاویر لگادی گئیں میرے خلاف الزامات محض پروپیگنڈہ ہیں میرے ساتھ اس قسم کا کوئی واقعہ رونما نہیں ہوایہ ایک سوچی سمجھی خانہ جنگی پھیلانے کی سازش ہے اور انتخابات سے قبل یہ پری پولنگ دھاندلی ہے بلاول بہت سی باتیں اچھی اور دلیری سے کرتا ہے تحریک لبیک یا رسول اللہ کی تحریک مسلم لیگ کی ہے اس کا کوئی اور وارث کیسے بن سکتا ہے جو پانچ جنگیں ہم نے ہاریں وہ میں نے نہیں کی بلکہ ایئر مارشل (ر) اصغر خان نے یہ باتیں کیں میرے پاس عمران خان اور نیب کا سرٹیفکٹ ہے کہ میں کلیئر ہوں پانامہ پیپر میں بھی ایک سینئر جج کا نام ہے چیف جسٹس صاحب کو غبارے چھوڑنے کی سیاست سے فرصت ملے تووہ ساتھ بیٹھے جج کے خلاف بھی کاروائی کریں کل کے بجٹ کے بعد باہر کے ملکوں میں رکھے اثاثے قانون کے مطابق حلال بنا دیئے گئے ہیں حیرانگی ہے کہ مجھے کبھی غدار تو کبھی ملک دشمن کہا جارہا ہے حالانکہ 71کی جنگ میں میں نے گلی گلی سے پاک فوج کے لئے چندہ جمع کیا 65میں خون کی بوتلیں دیںچار سال پہلے عمران خان نے مجھے کہا تھا کہ میرا ذہنی توازن ٹھیک نہیں رہتا اب وہ خود اس عمر سے آگے نکل گئے ہیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنی رہائش گاہ پی سی کالونی میں پریس کانفرنس کے دوران کیا مخدوم جاوید ہاشمی نے مزید کہا کہ آئی ایس آئی، ایم آئی اور جمہوریت کی جنگ میں نے لڑی ہے میں اداروں اور خاص کر افواج پاکستان کا سب سے بڑا حامی ہوں اورافواج پاکستان کے بوٹوں کی خاک کواپنی آنکھوں کا سرمہ سمجھتا ہوں اور اداروں کا احترام کرتا ہوں اس کا یہ مطلب نہیں ان کا اعلی کار بن جاﺅں میں پاکستان اور عوام کی سربلندی چاہتا ہوں ۔ سپاہی کو بھی سیلیوٹ کرتا ہوں اور کمانڈر انچیف کو بھی سیلوٹ کرتا ہوں اور اپنی کتاب زندہ تاریخ میں بھی 6صفحات میں لکھا کہ آئی ایس آئی کی پاکستان کے لئے بیش بہا خدمات ہیں اور بیرون پاکستان دفاعی جنگ بھی یہ ادارہ لڑرہا ہے اور اس کا مقابلہ امریکہ کا سی آئی اے بھی نہیں کرسکتا

پوسٹ ٹیگز:

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

*
*