23اضلاع پر مشتمل سرائیکی صوبے کے علاوہ صرف تین ڈویژنوں پر مشتمل صوبہ قبول نہیں کریں گے:سرائیکستان گرینڈ الائنس

23اضلاع پر مشتمل سرائیکی صوبے کے علاوہ صرف تین ڈویژنوں پر مشتمل صوبہ قبول نہیں کریں گے:سرائیکستان گرینڈ الائنس
ملتان (نمائندہ سرائیکستان) سرائیکستان گرینڈ الائنس کے صدر رانا فراز نون ، چیئرمین حیدر جاوید سید اور صدر سرائیکستان قومی رابطہ کمیٹی پروفیسر عام فہیم نے اعلان کیا ہے کہ 23اضلاع پر مشتمل سرائیکی صوبے کے علاوہ صرف تین ڈویژنوں پر مشتمل صوبہ قبول نہیں کریں گے ہمارے دروازے تمام زبانیں بولنے والوں کے لئے کھلے ہیں انتخابی صورتحال کا جائزہ لے کر آج تین جون کو اہم فیصلوں کا اعلان کریں گے ان خیالات کا اظہار انہوں نے پریس کلب میں پریس کانفرنس میں کیا جس میں شاہ نواز مشوری ، نجف عباس، اجالا لنگاہ، عثمان کریم بھٹہ، راشد عزیز بھٹہ، امجد فاروق، اصغر گرمانی، اختر گوپانگ ، اجمل میسن ودیگر بھی موجود تھے

رانا فراز نون نے مزید کہا کہ فاضل پور اجلاس میں سرائیکی تحریک کو مزید تیز کرنے کے لئے سرائیکستان گرینڈ الائنس بنایا گیا ہے جس میں وسیب کی سات سیاسی جماعتوں نے شرکت پر آمادگی ظاہر کی ہے ہم ڈیرہ اسمائیل خان اور ٹانک سمیت 23اضلاع پر مشتمل صوبہ سرائیکستان کے قیام کی جدوجہد جاری رکھیں گے اور اس سلسلے میں کسی قربانی سے گریز نہیں کریں گے انہوں نے کہا کہ ہم سپریم کورٹ سے درخواست کرتے ہیں کہ وہ مردم شماری میں ہونے والی دھاندلی کا نوٹس لے اور اس میں ملوث مردم شماری کے افسران کے خلاف مقدمات درج کئے جائیں سرائیکستان ڈیموکریٹک پارٹی اگرچہ الیکشن کمیشن میں رجسٹرڈ ہو چکی ہے لیکن ہم عام انتخابات میں سرائیکی صوبہ دشمن جماعتوں کو ہر گز ووٹ نہیں دیں گے اگر سرائیکی وسیب کی نہروں میں پانی نہ چھوڑا گیا تو احتجاجی تحریک چلائیں گے

حیدر جاوید سید نے کہا کہ ہم ملک میں انتخابی صورتحال کا جائزہ لے رہے ہیں اور میدان خالی نہیں چھوڑیں گے الیکشن میں متحرک کردار ادا کریں گے اور گرینڈ الائنس کے اجلاس کے بعد آج الیکشن لڑنے یا سرائیکی صوبے کی حامی جماعتوں کی حمایت کے حوالے سے اہم فیصلے کریں گے حیدر جاوید سید نے مزید کہا کہ 23اضلاع میں رہنے والے جو بھی زبان بولیں ہمارے لئے محترم ہیں ہمارے دروازے سب کے لئے کھلے ہیں کیونکہ ہم تین اضلاع پر مشتمل لولا لنگڑا صوبہ قابل قبول نہیں ہو گا پروفیسر عامر فہیم نے کہا کہ سرائیکی قوم آج بھی بے پناہ مسائل کا شکار ہے اس وسیب میں جانور اور انسان آج بھی ایک گھاٹ پر پانی پیتے ہیں یہ وسیب صحت و تعلیم کی سہولتوں سے محروم ہے اور غریب کے لئے باعزت زندگی گزارنا مشکل ہے سرائیکستان گرینڈ الائنس اپنی تحریک جاری رکھے گا اور وسیب کے لوگوں کے حقوق کا ضامن بنے گا

پوسٹ ٹیگز:

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*
*